Home Life hacks Hackers can access your bank account on WhatsApp

Hackers can access your bank account on WhatsApp

0
39

ایک نیا واٹس ایپ اسکینڈل اسمارٹ فونز کو متاثر کر رہا ہے اور آپ اگلا شکار ہوسکتے ہیں۔ Rafiroff.com کی جانب سے ایک نیا اسکام، ایک بدنیتی پر مبنی لنک کا استعمال صارفین کو ان کی خفیہ، ذاتی معلومات جیسے کہ بینک کی تفصیلات چرا کر انہیں چیرنے کے لیے کیا جا رہا ہے۔

رپورٹس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ہیکرز ایک لنک پر کلک کرکے صارفین کو پھنسانے کے لیے واٹس ایپ کا استعمال کر رہے ہیں اور فون میں محفوظ معلومات تک رسائی کے لیے پس منظر میں چالیں چل رہے ہیں۔ اس سپیم لنک کی اطلاع ہے کہ آئی او ایس کے ساتھ ساتھ اینڈرائیڈ ڈیوائسز دونوں کو متاثر کیا ہے اور یہاں تک کہ ڈیسک ٹاپ صارفین جو WhatsApp ڈیسک ٹاپ استعمال کرتے ہیں ان کی مشینوں سے سمجھوتہ کرنے کی اطلاع ہے۔

نیوز 18 کے مطابق، یہ لنک واٹس ایپ صارفین کو بھیجا جاتا ہے تاکہ وہ انفیکشن پھیلانے کے لیے ان کے آلات اور مشینوں تک رسائی حاصل کر سکیں۔ CNBC نے اشارہ کیا کہ صارفین کی ایک بڑی تعداد پہلے ہی اس لنک سے متاثر ہو چکی ہے، اپنی نجی معلومات سے سمجھوتہ کر رہی ہے اور یہاں تک کہ اپنی بینک کی معلومات تک رسائی کی اجازت بھی دے رہی ہے۔ جب کوئی صارف لنک پر کلک کرتا ہے، ایک نیا صفحہ کھلتا ہے اور اس سے سروے کو پُر کرنے کے لیے ایک فارم کے ساتھ کہا جاتا ہے اور انھیں بھاری انعامات، تحفے ملیں گے۔ معلومات استعمال کرنے والے سے کہا جاتا ہے کہ وہ اپنا نام، عمر، بینک کی معلومات اور دیگر ذاتی معلومات بھی بھریں۔

ایک نیا واٹس ایپ اسکینڈل اسمارٹ فونز کو متاثر کر رہا ہے اور آپ اگلا شکار ہوسکتے ہیں۔ Rafiroff.com کی جانب سے ایک نیا اسکام، ایک بدنیتی پر مبنی لنک کا استعمال صارفین کو ان کی خفیہ، ذاتی معلومات جیسے کہ بینک کی تفصیلات چرا کر انہیں چیرنے کے لیے کیا جا رہا ہے۔

رپورٹس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ہیکرز ایک لنک پر کلک کرکے صارفین کو پھنسانے کے لیے واٹس ایپ کا استعمال کر رہے ہیں اور فون میں محفوظ معلومات تک رسائی کے لیے پس منظر میں چالیں چل رہے ہیں۔ اس سپیم لنک کی اطلاع ہے کہ آئی او ایس کے ساتھ ساتھ اینڈرائیڈ ڈیوائسز دونوں کو متاثر کیا ہے اور یہاں تک کہ ڈیسک ٹاپ صارفین جو WhatsApp ڈیسک ٹاپ استعمال کرتے ہیں ان کی مشینوں سے سمجھوتہ کرنے کی اطلاع ہے۔

نیوز 18 کے مطابق، یہ لنک واٹس ایپ صارفین کو بھیجا جاتا ہے تاکہ وہ انفیکشن پھیلانے کے لیے ان کے آلات اور مشینوں تک رسائی حاصل کر سکیں۔ CNBC نے اشارہ کیا کہ صارفین کی ایک بڑی تعداد پہلے ہی اس لنک سے متاثر ہو چکی ہے، اپنی نجی معلومات سے سمجھوتہ کر رہی ہے اور یہاں تک کہ اپنی بینک کی معلومات تک رسائی کی اجازت بھی دے رہی ہے۔ جب کوئی صارف لنک پر کلک کرتا ہے، ایک نیا صفحہ کھلتا ہے اور اس سے سروے کو پُر کرنے کے لیے ایک فارم کے ساتھ کہا جاتا ہے اور انھیں بھاری انعامات، تحفے ملیں گے۔ معلومات استعمال کرنے والے سے کہا جاتا ہے کہ وہ اپنا نام، عمر، بینک کی معلومات اور دیگر ذاتی معلومات بھی بھریں۔

اگر آپ کو WhatsApp پر کوئی پیغام موصول ہوتا ہے جس میں آپ سے Rediroff.com کے لنک پر کلک کر کے سروے کو بھرنے کے لیے کہا جاتا ہے۔

چلائیں… صرف مذاق کر رہے ہیں، اسے حذف کر دیں۔

NO COMMENTS

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here